top of page

3 مئی صحافیوں کا عالمی دن تحریر ۔ غلام مصطفیٰ بٹ جہلم


3 مئی صحافیوں کا عالمی دن

3 مئی دنیا بھر میں صحافیوں کا عالمی دن منایا جاتا ہے دنیا میں بہت سے عالمی دن منائے جاتے ہیں ان عالمی ایام کے منانے کا مقصد کسی کے ساتھ اظہارِ یکجہتی کرنا ۔دنیا کے انسانوں میں کہی حوالے سے شعور اجاگر کرنا یا کسی کو خراج تحسین پیش کرنا ہوتا ہے ان عالمی ایام کے سلسلے کا ایک دن صحافیوں کا عالمی دن بھی ہے صحافیوں کا عالمی دن منانے کا آغاز 1993 میں اقوامِ متحدہ کی جانب سے ہوا اسی دن کی اہمیت کے پیشِ نظر پوری دنیا میں صحافی برادری یہ دن شایان طریقے سے مناتے ہیں دنیا میں بہت سے شعبے ایسے ہیں جن میں کام کرنے والوں کو مختلف قسم کی مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے مگر صحافت کا شعبہ اور اس میں متعلقہ لوگ خطروں کے کھلاڑی ہوتے ہیں خصوصاً ہمارے جیسے تیسری دنیا کے صحافی ہر لحاظ سے خطروں میں گھرے رہتے ہیں صحافت چونکہ ایک مشکل کام ہے کیونکہ اس میدان سے وابستہ لوگ برستی گولیوں میں بھی اپنا کام جاری رکھتے ہیں میدان چاہیے سیاست کا ہو یا جنگ کا صحافی اپنی جان خطروں میں ڈال کر خبر تلاش کرتا ہے اور اسے عام عوام تک پہنچانا ہے ملکی ادارے کیا کررہے ہیں بین الاقوامی حالات کیا ہیں حکومت کیا کر رہی ہے ان سب خبروں سے عوام کو باخبر رکھنا صحافی کی زمے داریوں میں شامل ہوتا ہے لیکن اس صحافی کو اپنے کام کے دوران کن مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے یہ صرف صحافی ہی جانتا ہے صحافیوں کو چاہیے کہ وہ بھی اخلاقی اقدار کو اپنائیں اپنے حسن و سلوک سے لوگوں کو اپنا گرویدہ بنائیں آپ اسلام کی ہسٹری آٹھا کر دیکھیں دین اسلام تلوار سے نہیں پھیلا بلکہ اخلاق سیرت اور کردار سے پھیلا ہے آپ لوگ عوام کے دوست ہیں دشمن نہیں ۔جب آپ لوگ اپنے اخلاق کو اجاگر کرو گے تو لوگ خود بخود آپ کی طرف کھینچے چلے آئیں گے لوگ آپ پر بھروسہ کرنے لگیں گے اور جرم سر چڑھ کر نہ بولے گا اور معاشرے میں امن قائم ہوگا ۔۔۔

0 comments

Comments

Rated 0 out of 5 stars.
No ratings yet

Add a rating
bottom of page