top of page

وہ خوبصورت ملک جہاں جانے کے لیے کسی کو ویزا حاصل کرنے کی ضرورت نہیں


اگر آپ نئے سال کے آغاز میں بیرون ملک سیاحت کے لیے جانا چاہتے ہیں تو ایک خوبصورت مقام آپ کو خوش آمدید کہنے کے لیے تیار ہے۔

جی ہاں افریقی ملک کینیا جانے کے لیے اب دنیا کے کسی فرد کو ویزا حاصل کرنے کی ضرورت نہیں۔

اگر آپ Maasai Mara میں جنگل سفاری کا مزہ لینے چاہتے ہیں، نیروبی نیشنل پارک کی سیر کرنا چاہتے ہیں یا Nakuru جھیل میں پرندوں کا نظارہ کرنا چاہتے ہیں، تو کینیا کا رخ کریں، کیونکہ اب وہاں جانے کے لیے ویزا حاصل کرنے کی ضرورت نہیں۔کینیا کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ جنوری 2024 سے وہاں سیاحت کے لیے آنے والوں کو ویزا حاصل کرنے کی ضرورت نہیں۔

کینیا کی حکومت کی جانب سے سیاحوں کو ڈیجیٹل پلیٹ فارمز کے ذریعے اس ملک میں آنے کی اجازت دی جائے گی۔

کینیا کے صدر William Ruto نے کچھ عرصے قبل اس کا اعلان کیا تھا اور اب اس پر عملدرآمد کیا جا رہا ہے..انہوں نے اس موقع پر کہا تھا کہ دنیا کے ہر کونے سے تعلق رکھنے والے فرد کو کینیا آنے کے لیے ویزا حاصل کرنے کی ضرورت نہیں۔

واضح رہے کہ کینیا کا قدرتی جنت قرار دیا جاتا ہے جہاں نیشنل پارکس میں لاتعداد جانوروں کو دیکھنے کا موقع ملتا ہے۔

اس کے ساتھ ساتھ وہاں کے ساحلی علاقوں کی خوبصورتی بھی دیکھنے سے تعلق رکھتی ہے۔

اسی وجہ سے ہر سال لاکھوں سیاح کینیا کا رخ کرتے ہیں اور انہیں متعدد سہولیات بھی دستیاب ہوتی ہیں

0 comments

Recent Posts

See All

تحصیل پنڈدادنخان میں پرائیویٹ سکولوں کی لٹ مار کا بازار گرم،بھاری فیسیں وصول کرنے کے باوجود سہولیات ناپید بچے گھروں سے پینے کے صاف پانی کی بوتلیں لے کر جانے پر مجبور،محکمہ تعلیم جہلم میٹھی نیند سو گیا

تحصیل پنڈدادنخان میں پرائیویٹ سکولوں کی لٹ مار کا بازار گرم،بھاری فیسیں وصول کرنے کے باوجود سہولیات ناپید بچے گھروں سے پینے کے صاف پانی کی بوتلیں لے کر جاتے ہیں،گرم اور بند کمرے حبس کا مرکز بن گئے کھی

جہلم(ریاض گوندل)جہلم کے شہریوں پر چاروں طرف سے گردآلود دھول کی برسات، محکمہ ماحولیات خاموش تماشائی،چک دولت رانجھامیرا قلعہ روہتاس اور ملوٹ سے نکلنے والے کرش بجری ریت خاکے،شہری بیمار

جہلم(ریاض گوندل)جہلم کے شہریوں پر چاروں طرف سے گردآلود دھول کی برسات ہو رہی ہے محکمہ ماحولیات خاموش تماشائی بنا ہوا ہے چک دولت رانجھامیرا قلعہ روہتاس اور ملوٹ سے نکلنے والے کرش بجری ریت خاکے کے ڈمپرز

Comments

Rated 0 out of 5 stars.
No ratings yet

Add a rating
bottom of page