top of page

منگلا!کرش پلانٹ مالکان نے اپنی اجارہ داری قائم کر لی سرکاری ریٹ سے ہٹ کر کریش فروخت کی جانے لگی


منگلا ( آصف محمود چودھری Jhelumnews.uk) منگلا اور گردو نواح میں چند کرش پلانٹ مالکان نے اپنی اجارہ داری قائم کر لی سرکاری ریٹ سے ہٹ کر کریش فروخت کی جانے لگی تفصیلات کے مطابق سرکاری ریٹ کے مطابق ڈاؤن بجری کا ریٹ چھ ہزار فی سیکڑا لگایا گیا تھا اسی طرح دیگر ریٹ بھی لگائے گئے تھے اور ڈیمپر کا کرایہ بھی طے کیا گیا تھا لیکن کرش پلانٹ مالکان نے اجارہ داری قائم کر لی کوئی بھی کرش سرکاری ریٹ کے مطابق بجری دینے کے لیے تیار نہیں چھ ہزار فی سیکڑا والی بجری 8 ہزار روپے فی سیکڑا فروخت کی جا رہی ہے جبکہ ڈیمپر کا کرایہ بھی زیادہ وصول کیا جا رہا ہے یاد رہے کہ ریڈ زون میں کرش پلانٹ کی مکمل بندش ہو چکی ہے سپریم کورٹ کے حکم پر ریڈ زون میں تمام کرش پلانٹ بند کروا دیے گئے حفاظتی اقدامات کے تحت ان کی بندش بہت ضروری تھی لیکن اب چند کرش پلانٹ جو کہ ریڈ زون سے باہر ہیں اپنی من مانیوں میں مصروف ہیں سرکاری ریٹ لسٹ کو انہوں نے پس پشت ڈال دیا ہے جیب دونوں ہاتھوں سے خالی کی جا رہی ہے یہ بھی انکشاف ہوا ہے ریڈ زون کی خلاف ورزی کرتے ہوئے رات کی تاریکی میں مٹیریل اٹھایا جاتا ہے کچھ بند کیے گئے کرش پلانٹ بڑے جنریٹر کے ذریعے رات کے ٹائم چلائے جاتے ہیں جو کہ جہلم کے علاقہ میں ہیں کریش پلانٹ مالکان نے اپنی من مانی شروع کر رکھی ہے میرپور انتظامیہ کی جانب سے ریٹ لسٹ پر عمل نہیں کیا جا رہا یہ کریش پلانٹ ضلع میرپور کی حدود میں ہیں عوام نے ڈپٹی کمشنر میر پر سے فوری نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے

0 comments

Comments

Rated 0 out of 5 stars.
No ratings yet

Add a rating
bottom of page