top of page

منگلا ڈیم مچھلی کا ٹھیکہ درد سر بن گیا سردی شروع ہوتے ہی ڈیم سےمچھلی کی وسیع پیمانے پر چوری شروع

منگلا( اصف محمود چوہدری) منگلا ڈیم مچھلی کا ٹھیکہ درد سر بن گیا سردی شروع ہوتے ہی ڈیم کے مختلف حصوں میں مچھلی کی وسیع پیمانے پر چوری شروع جبکہ وابڈا کہ ریزرو ایریا میں بھی چوری مچھلی کا شکار جاری ہے اس سال حکومتی خزانے کو کروڑوں روپے کا نقصان ہونے کا خدشہ ہے محکمہ فشریز کے اہلکار بے بسی کی تصویر بنے نظر اتے ہیں ذرائع کے مطابق محکمے کو سٹاف کی شدید کمی ہے جبکہ دیگر سہولیات کا بھی فقدان ہے اتنے بڑے ڈیم کے لیے محکمہ کے پاس سپیڈ بوٹس نہیں ہے جو ایک تھی وہ بھی خراب ہے سٹاف کی شدید کمی ہے جبکہ منگلا ڈیم میں پولیس چیک پوسٹ کی اشد ضرورت ہے مچھلی چوروں نے اور دیگر جرائم پیشہ لوگوں نے ڈیم کو محفوظ پناہ گاہ بنا رکھا ہے اب سردی کا موسم شروع ہو چکا ہے ساتھ ہی مچھلی چوروں نے منگلا ڈیم میں وسیع پیمانے پر مچھلی کا شکار شروع کر رکھا ہے کوئی رکاوٹ نہ ہونے کی وجہ سے مچھلی چوروں نے اپنا راج بنا رکھا ہے اور سرکاری خزانے کو کروڑوں روپے کا نقصان پہنچایا جا رہا ہے اسی طرح وابڈا منگلا سیکیورٹی کو بھی مسائل کا سامنا ہے سٹاف کی کمی اور سہولیات کا فقدان ہے جس کی وجہ سے ڈیم کی نگرانی موثر طریقے سے نہیں ہو رہی جس کی وجہ سے مچھلی چوروں کو کھلی چھٹی ملی ہوئی ہے جس کی وجہ سے وہ ڈیم کے ریزرو ایریا میں مچھلی چوری کرتے ہیں عوام نے وزیراعظم ازاد کشمیر اور چیف سیکرٹری ازاد کشمیر سے فوری نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے

0 comments

Comments

Rated 0 out of 5 stars.
No ratings yet

Add a rating
bottom of page