top of page

دینہ//ایکسائز انسپکٹر سے 11270 گرام چرس اور 7560 گرام افیون برآمدانسپکٹر جنید سمیت پانچ سرکاری و پرائیویٹ ملازمین پر مختلف دفعات کے تحت مقدمہ درج

دینہ(نثار مغل سے)دینہ//ایکسائز انسپکٹر سے 11270 گرام چرس اور 7560 گرام افیون برآمدانسپکٹر جنید سمیت پانچ سرکاری و پرائیویٹ ملازمین پر مختلف دفعات کے تحت مقدمہ درج ضلع جہلم کی تاریخ کی سب سے بڑی اور انوکھی ایف آئی آر منشیات پکڑنے والوں کی بڑی کاروائی ان ہی کو لے ڈوبی ۔یس ایچ او تھانہ سوہاوہ فرخ شبیر ڈار کو بھاری رشوت کی پیشکش کرنا مہنگا پڑ گیا پولیس تھانہ دینہ میں منشیات پکڑنے والوں کے خلاف تاریخ کی انوکھی ایف آئی آر درج تفصیلات کے مطابق پانچ جنوری کو ایکسائز اینڈ نارکوٹس انسپکٹر جنید نے پرائیوٹ و سرکاری ملازمین کے ساتھ تھانہ سوہاوہ میں ناکہ بندی کے دوران 38 کلو افیون اور چرس پکڑی جو ملزمان کے ساتھ مختلف ڈیلز ہوتی رہی اور بالآخر ملزمان کو بھاری رشوت لے کر چھوڑ دیا گیا اب منشیات کو ٹھکانے لگانے کے لیے پولیس تھانہ سوہاوہ کے ایس ایچ او کو اطلاع دی گئی کہ انسپکٹر جاوید نے بھاری مقدار میں منشیات پکڑی ہے جس کو تھانہ سوہاوہ لایا جا رہا ہے ایس ایچ او تھانہ سوہاوہ نے وقوعہ کی بابت فوری طور پر ڈی پی او جہلم ناصر محمود باوجوہ کو مطلع کیا کافی دیر انتظار کے بعد انسپکٹر جاوید نے تھانہ سوہاوہ کو اطلاع دی کہ ملزمان موقعہ سے فرار ہو گئے ہیں جس پر ایس ایچ او تھانہ سوہاوہ نے فوری طور پر حالات و واقعات کا جائزہ لینے کے لیے موقعہ ملاحظہ کیا اور مشکوک حالات کے متعلق افسران بالا کو اطلاع دی جس پر ایکسائز انسپکٹر جنید منشیات کے 15 پیکٹ لے کر تھانہ دینہ پہنچا جہاں پر ایس ایچ او تھانہ دینہ سید احسان شاہ نے بھی فوری طور پر افسران بالا کے نوٹس میں لایا انسپکٹر جنید کی طرف سے تھانہ دینہ کے ایس ایچ او کو بھی بھاری رشوت کی پیشکش کی گئی لیکن ایس ایچ او تھانہ دینہ نے فوری طور پر انسپکٹر جنیدکو تھانے پابند کیا ڈی پی او جہلم ناصر محمود باجوہ نے فوری طور پر نوٹس لیتے ہوئے معاملہ کی غیر جانبدار انکوائری کروانے کے لیے ٹیم تشکیل دی جس کے بعد حالات و واقعات میں ایکسائز انسپکٹر جنید پانچ ملازمین اور ایک پرائیوٹ شخص نے منشیات پاس رکھ کر ملزمان کو چھوڑنے کا جرم سرزد کرنا ثابت ہوا جن کے خلاف تھانہ دینہ میں مقدمہ درج کردیا گیا عوامی حلقوں کی طرف سے ڈی پی او جہلم کے فوری نوٹس اور بھر پور ایکشن پر انہیں خراج تحسین پیش کیا گیا

0 comments

Comments

Rated 0 out of 5 stars.
No ratings yet

Add a rating
bottom of page