top of page

دینہ (رانا محمد عاصم سے) زیر زمین پانی کا بے دریغ استعمال ہم اپنی آنے والی تین نسلوں کا پانی گٹروں میں بہا چکے 2025 میں پاکستان قحط زدہ ممالک کی فہرست میں شامل ہوجائے گا(خصوصی رپورٹ۔جہلم نیوز)

دینہ (رانا محمد عاصم سے) زیر زمین پانی کا بیدریغ استعمال ہم اپنی آنے والی تین نسلوں کا پانی گٹروں میں بہا چکے ہیں عالمی اداروں کے سروے کے مطابق 2025 میں پاکستان قحط زدہ ممالک کی فہرست میں شامل ہوجائے گا ہمارے دریاؤں نہروں جھیلوں کا صاف میٹھا اور چاندی جیسا پانی میں سیوریج ڈال کر اور کچرا پھینک کر آلودہ کر دیا گیا ہے۔قابل استعمال صاف اور میٹھے پانی کو گندا کرنے والے لوگوں اور صنعتی زون کے قریب زہریلے اور کمیکل ملے پانی کو بھی صاف شفاف نہری اور دریائی پانی میں ڈالنیپرسخصت سزائیں دینا ھونگی۔ ان خیالات کا اظہار حکیم لطف اللہ سیکرٹری جنرل پاکستان سوشل ایسوسی ایشن نے ایک پریس ریلیز کے ذریعے کیا انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان کے اندر دنیا کے بہترین نہری نظام کو کچرا اور گندگی ڈال کر اور اس کے ساتھ ملحقہ آبادیوں کا سیوریج کا کیمیکل والا پانی ڈال کر گندا کر دیا گیا ہے اس آلودہ پانی سے نہ صرف آبی حیات کو نقصان ہوا ہے بلکہ زرعی پیداوار بھی شدید متاثر ہوئی ہے اور شہروں کے ساتھ نہریں اور راجباہ گند سے بھرے پڑے ہیں افسوس کا مقام یہ کہ جن اداروں نے انکو صاف رکھنا تھا وہ بھی دن ہو کا کوڑا کرکٹ صبح اس میں ڈال رہے ہوتے ہیں اس زہر آلود پانی سے بیماریوں کی بہتات ہے ایک طرف پیٹ کے اور جگر امراض میں بیتحاشا اضافہ ہے۔ جانور اس پانی کو پی کر طرح طرح کی بیماریوں میں مبتلا ہو رہے شہروں کے ساتھ ساتھ نہروں میں گندگی کے ڈھیر ہونے سے وہاں بدبو کا ایک طوفان ہے اور مچھروں کی بہتات ہے جس سے ملیریا اور ڈینگی بخار سے جانوں کا ضیاع بھی ہو رہا ہے اور اس پانی میں نوجواں اور بچے جو نہاتے تھے انکی تفریح بھی ختم ہو چکی ہے سپریم کورٹ کے واٹر کمیشن کو ہوا میں اڑا دیا گیا اگر اس واٹر کمیشن پر علمدار اور کیا ہوتا آج ہماری یہ حالت نہ ہوتی

0 comments

Comments

Rated 0 out of 5 stars.
No ratings yet

Add a rating
bottom of page