top of page

جہلم کی دو قومی اور تین صوبائی اسمبلی کی نشستوں کے لیے کاغذات نامزدگی جمع کرانے کا سلسلہ جاری ۔ نامی گرامی اور نئے پہلوان میدان میں اتر آئے

جہلم(رانا عاصم سے)الیکشن 2024: جہلم میں کاغذات نامزدگی جمع کرانے کا سلسلہ جاری، تگڑے امیدوار سامنے آ گئے عام انتخابات کے لیے جہلم کی دو قومی اور تین صوبائی اسمبلی کی نشستوں کے لیے کاغذات نامزدگی جمع کرانے کا سلسلہ جاری ہے، جہلم کے حلقہ این اے 60 اور 61 کے لیے سابق ممبران اسمبلی سمیت تگڑے امیدوار میدان میں ہیں۔ حلقہ این اے 60 کے لیے سابق ایم این اے چوہدری فرخ الطاف، چوہدری ندیم خادم، چوہدری شہباز حسین، بلال اظہر کیانی، فواد چوہدری، چوہدری تسنیم ناصر راجہ زاہد عزیز اور ندیم افضل بنٹی سمیت 18 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جمع کرا دیے۔ حلقہ این اے 61 میں سابق وفاقی وزیر فواد چوہدری، نوابزادہ مطلوب مہدی، چوہدری فرخ الطاف ،سابق پراسیکیوٹر نیب فیصل فرید چوہدری، پیر حمزہ کرمانی اور فواد چوہدری کی اہلیہ حبا فواد سمیت دو درجن کے قریب امیدوار میدان میں ہوں گے۔ صوبائی حلقوں کی بات کی جائے تو حلقہ پی پی 24 میں کل 41 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی حاصل کیے جبکہ 17 امیدواروں نے اپنے کاغذات جمع کروائے ہیں جن میں سابق ایم پی اے راجہ یاور کمال، سابق ایم پی اے راجہ اویس خالد، مہر محمد فیاض، ڈاکٹر قاسم محمود چوہدری اور مرزا عبدالغفار شامل ہیں۔ حلقہ پی پی 25 میں سابق ایم پی اے چوہدری ظفر اقبال، چوہدری ندیم خادم، چوہدری لال حسین، چوہدری بوٹا جاوید سمیت کل 25 امیدوار اب تک کاغذات جمع کروا چکے ہیں۔ اسی طرح حلقہ پی پی 26 کے لیے متعدد امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جمع کروا دیے ہیں۔ جہلم کی دو قومی اور تین صوبائی اسمبلی کی نشستوں کیلئے کاغذات نامزدگی جمع کروانے والوں میں تمام حلقوں کے سابق ممبران اسمبلی شامل ہیں جبکہ یہ پہلا موقع ہے کہ عام انتخابات میں سب سے زیادہ امیدوار ن لیگ سے ہیں یہی وجہ ہے کہ ان تینوں حلقوں میں لیگی ٹکٹ کے لیے زور آزمائی جاری ہے۔ ایم کیو ایم کے علاوہ تمام سیاسی جماعتوں سے وابستہ بہت سے نئے چہرے بھی الیکشن میں حصہ لینے کے لیے کمر بستہ ہیں، ضلع جہلم میں ٹکٹوں کے فیصلے کے بعد باضابطہ الیکشن مہم شروع ہو گی

0 comments
bottom of page