top of page

جہلم:پاسپورٹ دفتر انتظامیہ نے سائلین سے زیادہ پیسے وصول کرنے کا نیا طریقہ ایجاد کرلیا

جہلم: پاسپورٹ دفتر کے ذمہ داران نے سائلین سے زیادہ پیسے وصول کرنے کا نیا طریقہ ایجاد کرلیا، نارمل پاسپورٹ 2 ماہ میں ملنے کی وجہ سے شہری بھاری فیسیں ادا کرکے ارجنٹ پاسپورٹ بنوانے پر مجبور ہیں، پاسپورٹ بننے میں تاخیر کی وجہ بیرون ملک سے میٹریل کی امپورٹ میں تاخیر ہے۔ تفصیلات کے مطابق جہلم پاسپورٹ کے ذمہ داران نے نارمل پاسپورٹ 2 ماہ یا اس سے زیادہ تاخیر سے ملنے کی وجہ سے سائلین بھاری فیسیں جمع کروا کر ارجنٹ پاسپورٹ بنوانے پر مجبور ہو گئے ہیں۔ محکمہ داخلہ اینڈ امیگریشن نے عوام سے زیادہ پیسے لینے کا نیا طریقہ استعمال کرتے ہوئے نارمل پاسپورٹ 20 دن کے بجائے 60 سے 65 روز کے بعد جب کہ ارجنٹ فیس والوں کو 15 روز میں اور فاسٹ ٹریک کو 2 روز میں پاسپورٹ فراہم کیے جارہے ہیں تاکہ عوام سے ارجنٹ اور فاسٹ ٹریک کی مد میں زیادہ سے زیادہ ریونیو اکٹھا کیا جائے۔ دوسری جانب ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ پاسپورٹ بننے میں تاخیر کی وجہ بیرون ملک سے میٹریل کی امپورٹ میں تاخیرہے

0 comments

Comments

Rated 0 out of 5 stars.
No ratings yet

Add a rating
bottom of page