top of page

جہلم:منشیات فروشی اور جسم فروشی عروج پر ،کئی علاقوں میں جسم فروشی کے ڈیرے آباد ہوگئے

جہلم ( Jhelumnews.uk ڈسٹرکٹ رپورٹر) جہلم کے کئی علاقوں میں منشیات فروشی اور جسم فروشی عروج پر کئی علاقوں میں جسم فروشی کے ڈیرے آباد ہوگئے ذرائع کے مطابق کئی دوسرے شہروں سے آنی والی خواتین نے جسم فروشی کے اڈے قائم کر رکھے ہیں جو کہ جہلم پولیس کی آنکھوں سے اوجھل ہیں تفصیلات کے مطابق جہلم کے کئی علاقوں میں جسم فروشی اور منشیات فروشی عروج پر زرائع کے مطابق کئی علاقوں میں جسم فروشی کے اڈے قائم ہوچکے ہیں اور وہاں پر منشیات فروشی بھی عروج پر ہے جبکہ کئی علاقوں میں منشیات کی کھلے عام فروخت بھی جاری ہے ان کو کوئی پوچھنے والا بھی نہیں پولیس اہلکار بھی ناکام جبکہ کئی جسم فروشی کے اڈے پولیس کی آنکھوں سے اوجھل ہیں منشیات فروشی سے نوجوان طبقہ تباہی کے دھانے پر پہنچ چکا اس وقت آئس نشہ شیشہ چرس شراب اور گردا کی فروخت کئی گلی اور محلوں میں ہو رہی ہے اس موقع پر شہریوں کا کہنا تھا کہ منشیات فروشی سے خصوصاً کم عمر نوجوان زیادہ اس لت میں پڑ چکے ہیں چونکہ پولیس اکا دکا منشیات فروش کو پکڑ لیتی ہے لیکن پیچھے ان کی جڑوں کو نہیں پکڑتی جو کہ جہلم کے کئی گلی اور محلوں میں پھیل چکی اس میں سر فہرست محلہ اسلام پورہ کا علاقہ ہے جہاں پر دیدہ دلیری سے منشیات فروخت ہو رہی ہے اور خریداروں کا بھی رش لگا رہتا ہے جبکہ محلہ اسلام پورہ اس وقت جہازوں کا ایئرپورٹ بھی بن چکا جہاں پر دن رات فلیٹس اترتی رہتی ہیں ان منشیات فروشوں نے قبرستان کو بھی نہیں چھوڑا یہ لوگ قبروں کی بےحرمتی بھی کرتے ہیں اور کئی جہاز قبروں پر بھی لینڈ کرتے ہیں شہریوں نے مزید کہا کہ منشیات فروشی کے ساتھ ساتھ جسم فروشی کے اڈے بھی قائم ہوچکے ہیں جہاں پر  نوجوان نسل تباہ ہو رہی ہے منشیات فروشی ہو یا جسم فروشی اس وقت دونوں کام نوجوانوں کو تباہی کی طرف لے جا رہے ہیں شہریوں نے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر جہلم ناصر محمود باجوہ سے مطالبہ کیا ہے کہ ان منشیات فروشی اور جسم فروشی کے اڈوں کو ختم کیا جائے تاکہ نوجوان نسل اس بے راہ روی کا شکار ہونے سے بچ جائے پولیس کے محافظ اہلکاروں کو الرٹ کیا جائے اور ہر گلی اور محلے میں جرائم پیشہ عناصر کے خلاف کڑی نظر رکھی جائے 

0 comments

Recent Posts

See All
bottom of page