top of page

جہلم:عدالت نے مقدمے کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے عذرا پروین کو باعزت بری کر دیا

جہلم (ڈسٹرکٹ رپورٹر)  ایڈیشنل اینڈ سیشن جج پنڈدادنخان شفقت شہباز راجہ کی عدالت سے بے گناہ افراد کو ریلیف کا سلسلہ جاری انسداد منشیات ایکٹ 9c  کے مقدمے میں ملوث ملزمہ عذرا پروین باعزت بری  تفصیلات کے مطابق  پولیس تھانہ پنڈدادنخان نے دوران روائیتی گشت ملزمہ سے 1220 گرام چرس برآمد کر لی  جس کے بعد مقدمہ نمبر 276/22 انشداد منشیات ایکٹ 9c درج کیا گیا  غربت اور معاشی بد حالی کے باعث ملزمہ اپنی صفائی میں وکیل پیش کرنے کی سکت نہ رکھتی تھی کہ راجہ ضمیر لاء چیمبر کے منجھے ہوۓ ایڈووکیٹ جلیس الحسن ایڈووکیٹ نے بغیر کسی لالچ محض اللہ کی خوشنودی کیلۓ اس کے مقدمے کی پیروی کا ذمہ لیا اور دوران بحث مضبوط دلائل اور مدلل جرح کی جبکہ سرکاری وکیل ملزمہ کے خلاف ٹھوس شہادت نہ پیش کر سکا فاضل عدالت نے مقدمے کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے عذرا پروین کو باعزت بری کر دیا فیصلہ سننے کے بعد عذرا پروین نے خوشی کے آنسوؤں سے بھری نگاہوں سے ایڈووکیٹ جلیس الحسن کا شکریہ ادا کیا اور اسکے تابناک مستقبل کیلۓ پروردگار کے حضور دعائیں کیں

0 comments
bottom of page