top of page

جب اللہ کا قانون نافذ ہوگا پھر مومن اور کافر دونوں کو یکساں انصاف ملے گا، امیر عبدالقدیر اعوان

دینہ(ادریس چودھری Jhelumnews.uk)ملک و قوم کی تعمیر کے لیے وہ قوت نافذہ درکار ہے جو بغیر کسی تفریق کے قانون پر عمل درآمد کرائے۔امیر عبدالقدیر اعوان

جب بھی معاشرے میں قانون مخلوق بنائے گی، خالق کا بنایا ہوا قانون نافذ نہیں ہوگا معاشرے میں انصاف نہیں بلکہ ظلم ہوگا۔اسلام میں انسانی حقوق مومن اور کافر کے لیے برابر ہیں۔صرف اسلامی نظام ہی معاشرے میں مساوات قائم کر سکتا ہے۔معاشرے میں تخریب کاری تب ہوتی ہے جب ہم اپنی عقل و دانش سے دینی حکم کا اطلاق کرتے ہیں ملک و قوم کی تعمیر کے لیے وہ قوت نافذہ درکار ہے جو بغیر کسی تفریق کے قانون پر عمل درآمد کرائے۔امیر عبدالقدیر اعوان شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ و سربراہ تنظیم الاخوان پاکستان کا جمعتہ المبارک کے موقع پر خطاب

انہوں نے کہا جب اللہ کا قانون نافذ ہوگا پھر مومن اور کافر دونوں کو یکساں انصاف ملے گا۔بندہ مومن کا ہر عمل معاشرے کے لیے معاون و مدد گار ہوتا ہے۔ آج ہمیں یورپ اور امریکہ کے قوانین کی مثال دی جاتی ہے کہ بہت اعلی ہیں اوران کے حالات ہم سے بہت بہتر ہیں۔ہماری بے عملی کی وجہ سے ہمارے حالات بد تر ہوئے ہیں ہم اپنے قوانین سے انحراف کرتے ہیں ان کا احترام نہیں کرتے جس کے پاس طاقت ہے وہ قوانین سے انحراف کرنا اپنا حق سمجھتا ہے۔ہم اپنی اپنی پسند کا اسلام دیکھنا چاہتے ہیں۔جب ساری کوشش اللہ کے لیے ہوگی پھر آسانیاں ہی ہوں گی۔ یورپ اور امریکہ کے بہت سے قوانین ایسے ہیں جن کی وجہ سے معاشرے پر بہت زیادہ منفی اثرات پڑتے ہیں جو قوانین انہوں نے بھی اسلام سے لیے ہیں وہاں وہ بھی استفادہ حاصل کر رہے ہیں۔

یاد رکھیں کہ دارالعرفان منارہ میں 6،7 مئی بروز ہفتہ،اتوار دوروزہ ماہانہ روحانی اجتماع کا انعقاد کیا گیا ہے جس میں حضرت جی مد ظلہ العالی خصوصی خطاب فرمائیں گے اور اجتماعی دعا بھی ہوگی۔ اس اجتماع میں ملک کے طول و عرض سے سالکین تشریف لاتے ہیں۔

0 comments
bottom of page