top of page

تحصیل پنڈدادنخان میں قصابوں کی اندھیر نگری، بیمار اور قریب المرگ جانور گھروں میں ہی ذبح کرنے لگے


پنڈدادنخان(سلیمان شہباز)تحصیل پنڈدادنخان میں قصابوں کی اندھیر نگری قصاب بیمار اور قریب المرگ جانور گھروں میں ہی ذبح کرنے لگے، مضر صحت اور بیمار جانوروں کا گوشت من مانے ریٹ پر سرعام فروخت ہورہا ہے،پنڈدادنخان شہر میں سلاٹر ہاوس ہونے کے باوجود قصاب مادہ جانوروں کا گوشت فروخت کررہے ہیں،انکشاف

ذرائع کے مطابق وٹنری کا عملہ بنا چیک کیئے ہی گھروں میں جا کر مہریں لگاتا ہے، انتظامیہ کارکردگی فوٹو سیشن تک محدود اصلا ح و احوال کا مطالبہ

تفصیلات کے مطابق تحصیل پنڈدادنخان میں عرصہ دراز سے مضر صحت گوشت کی فروخت جاری ہے جبکہ ذرائع نے انکشاف کیا ہے کہ قصاب سلاٹر ہاوس کی بجائے گھروں میں ہی مادہ اور بیمار جانور ذبح کر کے گوشت فروخت کرتے ہیں۔جبکہ و ٹنری ہسپتال کا ملازم مبینہ طور پر مہر لگا کر لاغر جانوروں کا گوشت پاس کرتا ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ ذبح ہونے والے جانوروں میں ایک آدھ جانور صحت مند جبکہ باقی مادہ اور لاغر جانوروں کی تذ بیح کھلے عام کی جاتی ہے۔ قصاب سلاٹر ہاوس ہونے کے باوجود رات کو گھروں میں جانور ذبح کر کے جو ساری رات پانی کے ٹب میں پڑا رہتا ہے۔ جو کہ بھاری ہونے کے ساتھ ساتھ مختلف جراثیموں سے آلودہ بھی ہو جاتا ہے جس سے بیماریاں پھیلنے کا خدشہ ہے جبکہ آبادی کے لحاظ سے ضلع جہلم کے دوسرے بڑے شہر میں نہ تو سلاٹر ہاوس ہے اور نہ ہی وٹنری کے عملہ نے یہاں آنے کی کبھی زحمت کی ہے کھیوڑہ شہر میں قصاب کئی کئی دن پرانا گوشت سرعام فروخت کررہے ہیں عوامی سماجی حلقوں نے اعلیٰ حکام سے پرزور اپیل کی ہے اسسٹنٹ کمشنر پنڈدادنخان اور متعلقہ ذمہ داران روزانہ کی بنیاد پر ویٹرنری ڈاکٹر کی سلاٹر ہاؤس میں موجودگی کو یقینی بنا نے کے لیے موثر اقدامات کریں اور بھاری جرمانوں کے ساتھ جرم کے مرتکب عناصر کے خلاف سخت قانونی کاروائی عمل میں لائیں تاکہ عوام کو مضر صحت خوراک سے بچایا جائے اور قصاب مافیا کا قبلہ درست ہو

0 comments
bottom of page